ہفتہ , فروری 20 2021
صفحہ اول / ٹیکنالوجی / موبائل فونز اور کمپیوٹر کی اسکرین کی صفائی کے دوران کی جانے والی چند خطرناک غلطیاں

موبائل فونز اور کمپیوٹر کی اسکرین کی صفائی کے دوران کی جانے والی چند خطرناک غلطیاں

موجودہ دور موبائل کا دور ہے اس دور میں میں اسکرین کی اہمیت سے انکار کرنا نا ممکن بات ہے اسکرین نے انسانوں کو اپنے نشے میں مبتلا کر رکھا ہے کھاتے پیتے سوتے جاگتے انسانوں کی سب سے پہلی نظر ہی موبائل فون ہا کمپیوٹر کی اسکرین پر ہوتی ہے- اتنے زيادہ استعمال کی وجہ سے عام طور پر موبائل کی اسکرین گندے ہاتھ لگنے سے خراب ہو جاتی ہے یہی حال ٹی وی اور کمپیوٹر کی اسکرین کا بھی ہوتا ہے جو بظاہر عام شیشے کی طرح ہی نظر آتی ہے- مگر حقیقیت میں وہ شیشہ نہیں ہوتی ہے مگر اکثر لوگ اس کی صفائی کرتے وقت اسے عام شیشے کی طرح ہی صاف کرتے ہیں اور اس کی صفائی میں وہ ایسی غلطیاں کر بیٹھتے ہیں جو کہ ان اشیا کی خرابی کا باعث بن جاتی ہیں-

1: سخت یا کھردرے کپڑے سے اسکرین کو صاف کرنا

بعض لوگ صفائ کرتے وقت مختلف قسم کے اسفنج کو اسکرین کی صفائی کے لیے استعمال کرتے ہیں جس سے عمومی طور پر عام سطح کے گرد و غبار کو صاف کیا جاتا ہے- مگر ان اسفنج اور اشیا کا استعمال اسکرین کی صفائی کے لیے انتہائ نا مناسب ہوتا ہے کیوں کہ سکرین نازک ہوتی ہے اور ان کے استعمال سے اس پر اسکریچ پڑ جاتے ہیں جن کی وجہ سے اسکرین ضائع بھی ہو سکتی ہے جب کہ اس کے مقابلے میں نرم کپڑے کے استعمال سے اسکرین کو صاف کرنا انتہائ مفید ہوتا ہے-

2: صفائی کرنے کے لئے عام محلول کا استعمال

عام طور پر لوگ شیشے کی صفائی کے لیے جس محلول کا استعمال کرتے ہیں ان کے اندر امونیا یا ایسیٹون موجود ہوتا ہے جو کہ موبائل کی اسکرین کے لیے انتہائ خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں- اس لیے اسکرین کی صفائی کے لئے کسی بھی قسم کے محلول کا استعمال بلکل نہ کریں اور اگر چکنائی وغیرہ کے دھبے صاف نہ ہو رہے ہوں تو اس صورت میں اسکرین کی صفائی کے لیے خاص قسم کے محلول
بازار سے مل جاتے ہیں جن کو نرم کپڑوں کے ساتھ آپ استعمال کر سکتے ہیں-

3: سرف والا اسپرے

پرانے زمانے میں لوگ پرانے ٹیلی وژن کی اسکرین کو سرف ملے پانی کے اسپرے سے صاف کر لیتے تھے اور اسکرین محفوظ رہتی تھی ایسا اس لیے ہوتا تھا کیونکہ کہ ان ٹیلی وژن پر شیشے کی ایک تہہ موجود ہوتی تھی- مگر اب موجودہ دور میں اس طرح کی اسکرینز موجود نہیں ہیں یہی وجہ ہے ان کے اوپر اسپرے کرنے سے اس بات کا خطرہ موجود ہوتا ہے کہ اندر پانی جا سکتا ہے جو کہ خطرناک ثابت ہو سکتا ہے- اس لیے اس کام کو کرنے سے احتیاط کرنی چاہیے-

4: گیلے ٹشو پیپر سے صفائی کرنا

اکثر لوگ اسکرین کو صاف کرنے کے لیے گیلے یا ویٹ ٹشو پیپر کا استعمال کرتے ہیں جس میں خوشبو کے ساتھ ساتھ الکوحل بھی موجود ہوتا ہے جس کی وجہ اسکرین کو نقصان پہنچ سکتا ہے- اسلئے اس کے استعمال سے پرہیز کرنا چاہیے اور اس کے ساتھ ساتھ الکوحل سے ٹشو پیپر کا کاغذ گھل جاتا ہے جو کہ موبائل وغیرہ کی اسکرین کی سطح پر چپک کر اس کو شدید نقصان پہنچا سکتا ہے-

About اردوباز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.